تصورات


ہمارے اکابر کے تصورات کو آج کے دور میں سمجھنے کے لئے سب سے بڑی رکاوٹ
موجودہ دور میں استعمال ہونے والی اصطلاحات اور الفاظ ہیں۔ کئی اصطلاحات
ایسی ہیں جو ہر دور میں علمی ترقی، رابطے کے ذرائع کی ترویج اور بین
الاقوامی رائے عامہ کو ایک ساتھ مخاطب کرنے کی لگن میں اپنے اصلی معنی اور
مفہوم جن کو کسی خاص وقت کے محاورے کے طور پر استعمال کیا گیا۔ یہ الفاظ
اپنے معنی یا تو کھو دیتے ہیں یا ان کے معنی مثبت اور منفی زاویوں کی وجہ
سے تبدیل ہو جاتے ہیں۔ لفظ فہمی کا بنیادی اصول یہی ہے کہ ہر لفظ کو اس کے
استعمال کرنے والے کی منشا اور اس کے معنوں کی روشنی میں ہی سمجھا جائے۔
یہ اصول ہر دور کے عالموں کے لئے ایک مسئلہ رہا۔ اہرام مصر کے محققین اس
الجھن کو سلجھا رہے ہیں کہ اس وقت کی تعمیر و تحریر، اشاروں اور کنایوں کا
کیا مفہوم تھا اور وہ اشارے اور کنائے ہمارے لئے کتنے بامعنی ہیں۔ تاریخ
داں اس الجھن کو سلجھا رہے ہیں کہ تزک بابری میں بتائی جانے والی جنگی
حکمت عملی آج کس حد تک کامیاب ہے، اس پس منظر میں علامہ اقبال اپنے دور
میں رائج تمام طرز ہائے حکمرانی کی کوتاہیوں کو رد کرتے ہوئے جمہوریت کو
سب سے بہترین طرز حکومت سمجھتے تھے۔ ان کا خیال تھا اس طرز حکومت میں
تحقیق اور عوام کی خوشحالی کی تدبیریں کی جائیں گی، انہوں نے اس طرف بھی
اشارہ کیا ہے کہ عوام کی حکمرانی کہیں گروہ کی حکمرانی نہ بن جائے اور یہ
طرز حکومت جاگیرداروں اور اشرافیہ کے زیر اثر نہ آجائے، وہ جمہوریت کو
تبدیل حالات کا ذریعہ سمجھتے ہیں۔ ان کے اصول شرع کے مطابق جماعِ امت
ہمیشہ حق پر ہوتا ہے، اس کا مفہوم عام فہم زبان میں یہ ہے کہ اکثریت کبھی
دھوکا نہیں کھاتی۔ علامہ اقبال بھی اسی اصول سے یہ نتیجہ اخذ کرتے ہیں کہ
اگر مدبران قوم عوام کی رہنمائی کریں تو عوام کا فیصلہ غلط نہیں ہو گا۔
قوموں کی رہنمائی اور گمراہی کے درمیان تحقیق اور تجسس کا ہی فرق ہے، جو
قومیں علم اور تحقیق کو اپنا رہنما بناتی ہیں، وہ کامیاب ہوجاتی ہیں۔
علامہ اقبال کے تصورات میں جو کامیابی شعور کی بیداری میں ملی ہے، وہی
کامیابی جمہوریت کے فروغ کو ملی ہے۔ ان ہی اصولوں کے تحت انہوں نے عملی
طور پر قائداعظم کی تحریک کی حمایت کی تھی اور آج ہم ان ہی اکابر کے اعلیٰ
تصورات کے ثمرات کے متمنی ہیں۔
This entry was posted in اردو. Bookmark the permalink.

Leave a Reply

Fill in your details below or click an icon to log in:

WordPress.com Logo

You are commenting using your WordPress.com account. Log Out / Change )

Twitter picture

You are commenting using your Twitter account. Log Out / Change )

Facebook photo

You are commenting using your Facebook account. Log Out / Change )

Google+ photo

You are commenting using your Google+ account. Log Out / Change )

Connecting to %s