انشاٴ جی اٹھو اب کوچ کرو

ابن انشاٴ

آپ یہ غزل یہاں سے ڈاؤن لوڈ کرسکتے ہیں

This entry was posted in شاعرى. Bookmark the permalink.

9 Responses to انشاٴ جی اٹھو اب کوچ کرو

  1. Tarique says:

    رات کیا سوئے که باقى عمر کى نیند اڑگئ
    خواب کیا دیکها که دهڑکا لگ گیا تعبیر کا
    احمد فراز
    میں نے یه سوچ کے روکا نهیں جانے سے اسے
    بعد میں بهى یهى هوگا تو ابهى میں کیا هے
    انور شعور

  2. Tarique says:

     
     
    ابن انشاٴ کا ایک اور اچھا کلام حاضرِ خدمت ھے
     
    فرض کرو يہ جي کي بپتا جي سے جوڑ سنائي ہو
      فرض کرو يہ جي کي بپتا جي سے جوڑ سنائي ہو فرض کرو ابھي اور ہو باقي آدھي ہم نے چھپائي ہو
    فرض کرو تمہيں خوش کرنے کے ڈھونڈے ہم نے بہانے ہوں فرض کرو يہ نين تمہارے سچ مچ کے ميخانے ہوں
    فرض کرو يہ روگ ہو جھوٹا، جھوٹي پيت ہماري ہو فرض کرو اس پيت کے روگ ميں سانس بھي ھم پہ بھاري ہو
    فرض کرو يہ جوگ بجوگ کا ہم نے ڈھنگ رچايا ہو فرض کرو بس يہي حقيقت باقي سب کچھ مايا ہو
     
    ابن انشاٴ

  3. Shahbazz says:

     
    dude…check my profile…I have a message for you:) named TO TARIQ…how apt:)

  4. Tarique says:

    طارق تمھارے لئے میں نے یھ نظم یونیکوڈ میں لکھ دی ھے
     
     

    انشا جي اٹھو اب کوچ کرو، اس شہر ميں جي کو لگانا کيا وحشي کو سکوں سےکيا مطلب، جوگي کا نگر ميں ٹھکانا کيا اس وقت کے دريدہ دامن کو، ديکھو تو سہي سوچو تو سہي جس جھولي ميں سو چھيد ہوئے، اس جھولي کا پھيلانا کيا شب بيتي، چاند بھي ڈوب چلا، زنجير پڑي دروازے پہ کيوں دير گئے گھر آئے ہو، سجني سے کرو گے بہانا کيا پھر ہجر کي لمبي رات مياں، سنجوگ کي تو يہي ايک گھڑي جو دل ميں ہے لب پر آنے دو، شرمانا کيا گھبرانا کيا اس حسن کے سچے موتي کو ہم ديکھ سکيں پر چھو نہ سکيں جسے ديکھ سکيں پر چھو نہ سکيں وہ دولت کيا وہ خزانہ کيا جب شہر کے لوگ نہ رستہ ديں، کيوں بَن ميں نہ جا بسرام کرے ديوانوں کي سي نہ بات کرے تو اور کرے ديوانہ کيا

  5. Unknown says:

    Asalam o Alaikum
    hasb e maamool aik aur achi entry…
    Aap plz Iqbaal ka saqi nama zaroor post karien. mien e bohat talaash kia hai ise mujhe to nahi mila. ho skta hai aap k pas ho. agar hai to plz use zaroor post kijiye apni space per.
    Shukriya
    Allah Hafiz
    Zephyr

  6. Tarique says:

    ممکن ہے کہ تو جس کو سمجھتا ہے بہاراں اوروں کی نگاہوں میں وہ موسم ہو خزاں کا شاید کہ زمیں ہو یہ کسی اور جہاں کی تو جس کو سمجھتا ہے فلک اپنے جہاں کا

  7. Tarique says:

    آپ کون سا اردو سافٹ وئر استعمال کرتے ہیں

  8. Tarique says:

    کیا کسی کے پاس اردو یونیکوڈ میں قرانِ کریم کا اردو ترجمہ ہے؟ مجھے انٹرنیٹ پر اِن پیج میں تو ملا ہے لیکن یونیکوڈ میں نہیں۔ اگر کسی کے پاس ہو تو براہِ مہربانی یہاں پوسٹ کریں تاکہ اتارنے کیلئے رکھا جاسکے۔

  9. Tarique says:

    آپ اسے میری نرگسیت کہیے یا کچھ اور، میں اردو ٹائپنگ کے لیے اپنے بنائے ہوئے سوفٹ ویر اردو ایڈیٹر اور اردو ویب پیڈ ہی زیادہ تر استعمال کرتا ہوں۔

Leave a Reply

Fill in your details below or click an icon to log in:

WordPress.com Logo

You are commenting using your WordPress.com account. Log Out / Change )

Twitter picture

You are commenting using your Twitter account. Log Out / Change )

Facebook photo

You are commenting using your Facebook account. Log Out / Change )

Google+ photo

You are commenting using your Google+ account. Log Out / Change )

Connecting to %s